RSS
 

محفوظات برائے ’افسانے‘ زمرہ

گلابوں والی گلی

21 Oct 2014

پچھلی پوسٹ میں نیلم احمد بشیر کے افسانے کا ذکر آیا تھا  ۔ کل لائبریری گیا تو  نیلم کی کتاب  میں وہ افسانہ نظر آ گیا ۔ جن قارئین کی رسائی اس کتاب تک نہیں ھے یا وہ غیر ممالک میں  مقیم ہیں ہیں ان کے لیئے   یہ افسانہ حاضر ھے ۔  کتاب کا Read more…| مزید ۔۔۔

 
 

پس مہتاب

03 Mar 2014

ملک کے ایک مشہور لکھاری سے ملاقات کرنے جب ان کی قیام گاہ پر  پہنچے تو سلام دعا کے دوران ہی ہماری اردو میں گفتگو کو سُن کر کہنے لگے میں اپنی پرائیویٹ زندگی میں ،  پنجابی بولتا ہوں ، مجھ سے پنجابی میں گفتگو کیجئے ۔ یہ سن کر میں نے  اپنی “پردش ” Read more…| مزید ۔۔۔

 
 

کنواں ۔ بلراج کومل

26 Sep 2013

بلراج کومل پیدائش 25 ستمبر 1928 سیالکوٹ ، ایم اے انگریزی پنجاب یونیورسٹی لاہو ، پیشہ محکمہ تعلیم بھارت

 
Comments Off on کنواں ۔ بلراج کومل

زمرہ :- افسانے

 

فقیر کا تکیہ ۔ میر باقر علی داستان گو

26 Sep 2013

میر باقر علی اردو داستان گوئی اور  دلی کی تہذیب  کی آخری نشانی تھے ۔ داستان گوئی  کے فن میں  میر باقر علی نے خصوصی شہرت حاصل کی تھی۔یہ فن انہیں اپنے ننھیال سے ملا تھا۔ان کے نانا میر امیر علی اور ماموں میر کاظم علی  کا تعلق دہلی دربار سےتھا ۔ یہ دونوں مانے ہوئے Read more…| مزید ۔۔۔

 
Comments Off on فقیر کا تکیہ ۔ میر باقر علی داستان گو

زمرہ :- افسانے

 

الحمدللہ ۔ احمد ندیم قاسمی

26 Sep 2013

 
Comments Off on الحمدللہ ۔ احمد ندیم قاسمی

زمرہ :- افسانے

 

کھجوروں کا موسم ۔ ڈاکٹر سلیم اختر

25 Sep 2013

اگر یہ فرض کر لیا جائے کہ اچھا ادیب کسی حد تک وجدانی حس کا حامل بھی ہوتا ہے تو پھر ڈاکٹر سلیم اختر کا یہ افسانہ ان کی دروں بینی اور مستقبل بینی کی صلاحیت کا عکاس کہا جا سکتا ہے ۔ یہ افسانہ سن 1983 میں بلوچستان سے چھپنے والے ایک موقر جریدے Read more…| مزید ۔۔۔

 

طوائف

21 Sep 2013

وہ سب اس کمرے میں صبح سے یوں بیٹھے تھے جیسے پولیس کی جیل گاڑی میں قیدی بیٹھے ہوئے اپنے اپنے سنگین مقدمات کی عدالت میں پیشی کا انتظار کر رہے ہوں  ۔ گاہے گاہے ایک دبلے پتلے جسم  اور سالخوردہ شلوار قمیض میں ملبوس چپراسی نما ہرکارہ آ کر کسی امیدوار  کا نام پکارتاتو Read more…| مزید ۔۔۔

 
 

بوئے حرم پر ایک تبصرہ

26 Apr 2013

چند روز قبل عمر بنگش کے بلاگ صلہ عمر پر ان کا یک افسانہ بوئے حرم چھپا ۔ یہ تبصرہ اُسی افسانے کے بارے میں ہے ، عمر کے بلاگ پر شائع کرنے کی کوشش کی لیکن بلاگ سوفٹویئر نے کہا کہ تبصرہ بہت لمبا ہے اسے آپ اپنے پاس ہی رکھئیے ۔ اس لیئے Read more…| مزید ۔۔۔

 
 

قائم دین

19 Apr 2013

علی اکبر ناطق صاحب کا ایک افسانہ پچھلی پوسٹ میں شائع ہوا ، ان کا یہ دوسرا افسانہ پیش خدمت ہے ۔ ———————————————————- ہاں تو بول اس ڈبے کھری کا کیا لے گا؟ ویسے ایک بات کہوں ؟ چوری کا مال ہے سوچ کے مول لگانا ۔ کل کلاں پُلس آگئی تو اس کے ساتھ Read more…| مزید ۔۔۔

 
 

جیرے کی روانگی

14 Apr 2013

افسانہ نگار علی اکبر ناطق کا نام ادبی حلقوں کے لیئے نیا نہیں ہے لیکن اردو کے عام قارئین  ان سے زیادہ واقف نہیں ہیں ۔ میرا ان سے پہلا تعارف ان کے افسانوں تابوت ، متولی اور پگڑی باندھ لی وغیرہ  سے ہوا اور ان کے افسانوں میں مجھے وہی توانائی اور تازگی نظر Read more…| مزید ۔۔۔